ریکوڈک کیس لندن ہائیکورٹ نے پاکستان کو بڑا حکم جاری کر دیا

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)لندن ہائی کورٹ نے پاکستان کو ریکوڈک کیس میں کرپشن کے الزامات اٹھانے سے روک دیا ہے۔نجی ٹی وی کے مطابق لندن ہائی کورٹ کی جانب سے 98 صفحات پر فیصلہ جاری کیا گیا ہے جس میں پاکستان کو ریکوڈک کیس میں کرپشن کے الزامات اٹھانے سے روکنے کا کہا گیا ہے۔پاکستان نے آسٹریلین

فرم ٹیھتیان کو جزوی ایوارڈ دینے کا فیصلہ لندن ہائی کورٹ میں چیلنج کیا تھا۔لندن ہائی کورٹ نے قرار دیا کہ ریکوڈک کیس میں پاکستانی سپریم کورٹ کے فیصلے میں کرپشن کا ذکر تک نہیں تھا۔ سپریم کورٹ نے معاہدے کو غلط قرار دیتے ہوئے بدعنوانی کا حوالہ نہیں دیا تھا۔فیصلے میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ بلوچستان حکومت کے پاس بدعنوانی کے نئے شواہد ہیں تو وہ انٹرنیشنل کامرس آف چیمبر (آئی سی سی) سے رجوع کرے، پاکستانی لیگل ٹیم، سپریم کورٹ کے فیصلے کی بنیاد پر کیس کو کالعدم قرار دلانا چاہتی تھی۔یاد رہے کہ عالمی بینک کے انٹرنیشنل سینٹر فار سیٹلمنٹ آف انویسٹمنٹ ڈسپیوٹس (اکسڈ) نے ریکوڈک ہرجانہ کیس میں پاکستان پر تقریباً 6 ارب ڈالر کا جرمانہ عائد کیا تھا جس کے خلاف پاکستان نے اپیل دائر کی تھی۔پاکستان کی اپیل پر اکسڈ نے آسٹریلوی اور چِلی کی کمپنیوں کو 6 ارب ڈالر جرمانے کی ادائیگی پر عمل درآمد روکنے کا مستقل حکم امتناع جاری کر دیا تھا۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *