شرجیل میمن کیس کا تفتیشی افسر نوکری سے فارغ

کراچی، لاہور(این این آئی، آن لائن)سابق صوبائی وزیر شرجیل میمن و دیگر کے خلاف آمدن سے زائد اثاثے بنانے سے متعلق ریفرنس کے تفتیشی افسر محمد عمیر کو نوکری سے فارغ کردیا گیا۔نوٹیفیکیشن کے مطابق محمد عمیر پرمس کنڈیکٹ اور حساس معلومات غیر متعلقہ شخص

کو دینے کا الزام تھا۔محمد عمیر کے برطرفی نوٹیفیکیشن میں کہا گیا کہ انہیں 2 دسمبر 2020 کو پہلا شوکاز جاری کیا گیا تھا۔نوٹیفیکیشن کے مطابق محمد عمیر نوکری سے فارغ کرنے کا فیصلہ 30 دن میں چیلنج کرسکتے ہیں۔دریں اثناکراچی کی احتساب عدالت کلفٹن میں غیر قانونی الاٹمنٹ ریفرنس کی سماعت فاضل جج کی رخصت کے باعث لنک عدالت میں ہوئی، سابق سٹی ناظم مصطفی کمال اور دیگر ملزمان احتساب عدالت میں پیش ہوئے۔دوران سماعت عدالت نے مصطفی کمال و دیگر کے خلاف کلفٹن میں غیر قانونی الاٹمنٹ کے ریفرنس کیس میں تفتیشی افسر کو اصل دستاویزات پیش کرنے کا حکم دیتے ہوئے مزیدسماعت 27 جولائی تک کے لیے ملتوی کردی۔ عدالت نے آئندہ سماعت پر سب رجسٹرار پراپرٹیز کو بھی اصلی دستاویزات پیش کرنے کا حکم دے دیا۔دوسری جانب لاہور کی احتساب عدالت نے مسلم لیگ نون کے رہنما خواجہ محمد آصف کیخلاف آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس پر سماعت 12 اگست تک ملتوی کردی۔

احتساب عدالت کے جج شیخ سجاد احمد نے ریفرنس کی سماعت کی، خواجہ آصف اپنے وکلاء کے ہمراہ وفاقی کالونی میں قائم احتساب عدالت میں پیش ہوئے۔عدالت نے کیس کی سماعت 12 اگست تک ملتوی کر دی، نیب کے مطابق خواجہ آصف 1991ء میں سینیٹر بنے اور اس وقت ان کے مجموعی اثاثے 51 لاکھ روپے تھے، 2018ء تک خواجہ آصف کے اثاثے 221 ملین تک پہنچ گئے جو ملزم کی ظاہری آمدن سے مطابقت نہیں رکھتے۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *