بھارت نے چین کی سرحد کے ساتھ مزید 50 ہزار فوجی تعینات کر دیے ‎

نئی دہلی(این این آئی) بھارت نے غیر قانونی طور پراپنے زیر قبضہ جموں و کشمیر میں لداخ خطے کے علاقے لہہ میںکم از کم 50ہزار اضافی فوجی تعینات کردیے ہیں۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق بھارت نے گزشتہ چند ماہ کے دوران کنٹرول لائن اور لائن آف ایکچول کنٹرول پر تین مختلف علاقوں میںبھاری توپوں اور لڑاکا جیٹ طیاروں کے ساتھ ساتھ اضافی فوجی تعینات کئے ہیں۔ لداخ خطے میں پہلے سے ہی ساڑھے چارلاکھ سے زائد بھارتی فوجی اور پیراملٹری فورسز موجود ہیں۔بھارت کے ایک لیفٹیننٹ جنرل اور بھارتی فوج کی شمالی کمان کے سابق کمانڈر ڈی ایس ہوڈا نے کہا کہ جب سرحدی انتظام کے معاہدے ٹوٹ چکے ہوں توکسی بھی طرف بہت سے فوجیوں کی موجودگی خطرناک ہے۔انہوں نے کہاکہ فریقین متنازعہ سرحد پرجارحانہ گشت کریں گے اور ایک چھوٹا سا واقعہ غیرارادی طورپرقابو سے باہرہوسکتا ہے ۔لداخ کے شمالی علاقے میں جہاںگزشتہ سال بھارت اور چین کے درمیان کئی مرتبہ جھڑپیں ہوئیں ، سب سے زیادہ فوجی تعینات کئے گئے ہیں ۔ علاقے میں تقریباً 20ہزار سے زائداضافی فوجی بھیجے گئے ہیں۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.