چیئرمین نادرا طارق ملک کی 20ہزار ڈالر تنخواہ، نادرا ترجمان حقیقت سامنے لے آئے

اسلام آباد (این این آئی)نیشنل ڈیٹا بیس اینڈ رجسٹریشن اتھارٹی (نادرا)نے وضاحت کی ہے کہ چیئرمین نادرا طارق ملک کی 20 ہزار ڈالر تنخواہ کی سمری بارے خبریں بے بنیاد ہے ۔ پیر کو نادراترجمان کی طرف سے جاری بیان کے مطابق چیئرمین نادرا کی 20ہزار ڈالر تنخواہ کی سمری کا حقیقت سے کوئی تعلق نہیں۔ ترجمان نادرا نے

بتایا کہ اس سے پہلے طارق ملک بطور چیف ٹیکنیکل ایڈوائزر برائے اقوام متحدہ 130سے زائد ممالک کی حکومتی کارکردگی کو ڈیجیٹل ٹیکنالوجی کے ذریعے بہتر بنانے پر اپنی خدمات سرانجام دے رہے تھے۔2012میں طارق ملک بطور چیئرمین نادرا بھی خدمات سرانجام دیں اس دوران انہوں نے پاکستان میں سمارٹ شناختی کارڈ کا نظام متعارف کرایا۔ طارق ملک کو 2013 میں حکومت پاکستان کی جانب سے ٹیکنالوجی کی فیلڈ میں گرانقدر خدمات کی بنا پر ستارہ امتیاز سے نوازا گیا۔ 2016میں امریکی اور یورپی تھنک ٹینک نے طارق ملک کو دنیا کے 100بااثر ترین آئی ٹی ماہرین میں نامزد کیا۔ گزشتہ 3 برس سے طارق ملک کو ورلڈ آئیڈنٹیٹی نیٹ و رک کے 100بااثر ترین شخصیات میں مسلسل تیسری بار شامل کیا گیا ہے۔ 2009میں طارق ملک کو اٹلی میں منعقدہ آئی ٹی انٹرنیشنل کانفرنس میں آٹ اسٹینڈنگ اچیومنٹ ایوارڈ سے نوازا گیا۔انہوں نے ہائیڈل برگ جرمنی سے انٹرنیشنل مینجمنٹ اور قائداعظم یونیورسٹی سے کمپیوٹر سائنسز میں ماسٹر ڈگری حاصل کی۔ علاوہ ازیں طارق ملک امریکن جان ایف کینیڈی سکول آف گورنمنٹ، ہارورڈ یونیورسٹی امریکہ اور سٹیفن فورڈ یونیورسٹی امریکہ سے فارغ التحصیل ہیں۔ نیشنل ڈیٹا بیس اینڈ رجسٹریشن اتھارٹی (نادرا)نے وضاحت کی ہے کہ چیئرمین نادرا طارق ملک کی 20 ہزار ڈالر تنخواہ کی سمری بارے خبریں بے بنیاد ہے ۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.