معروف ٹک ٹاکر جنت مرزا پر توہین مذہب کا الزام، مقدمہ درج‎

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)پاکستان کی نمبر ون ٹک ٹاکر جنت مرزا پر توہین مذہب کامقدمہ درج ہو گیا ۔ تفصیلات کے مطابق جنت مرزا نے کچھ روز قبل اپنے ٹک ٹاک اکائونٹ پر کچھ ویڈیوز اپ لوڈ کی تھیں ان ویڈیوز میں جنت مرزا کے لباس پر ایک زنجیر تھی جس میں مسیحیوں کی مذہبی علامت صلیب بندھی ہوئی تھی۔اخبار کی رپورٹ کےمطابق مسیحی برادری کے لوگوں نے فیڈرل انویسٹی گیشن آفس گلبرگ میں ایف آر درج کروا دی ہے ،

ایف آئی آر کے متن کے مطابق جنت مرزا نے کچھ روز قبل ویڈیوز بنائی ان کے لباس پر ایک زپ ہے جس پر صلیب لٹکی ہوئی انہوں نے ہمارے مقد نشان کی توہین کی برحرمتی کی ہےاور پاکستان میں رہنے والے لاکھوں مسیحیوں کی دل آزاری ہوئی ہے ،ان کیخلاف مقدمہ درج کر کے سخت سے سخت کاروائی کی جائے ۔ دوسری جانب پاکستان کی نمبر ون ٹک ٹاک اسٹار جنت مرزا کا کہنا ہے کہ ٹی وی چینلز پر چلائی جانے والی خبریں کہ ٹک ٹاک سے کسی کی جان چلی گئی یہ سب جھوٹ ہوتا ہے۔جنت مرزا نے نجی ٹی وی جیو پروگرام ایک دن جیو کے ساتھ میں میزبان سہیل کیساتھ گفتگو میں کہا ہے کہ ٹک ٹاک کے ایس او پیز ہیں جن کے تحت آپ ویڈیو میں پستول نہیں دکھا سکتے۔ٹاک ٹاک اسٹار کا کہنا تھا کہ ہم اصل پستول کی جگہ ہاتھ کی انگلیوں سے پستول کی طرح اشارہ کرلیتے ہیں، تو یہ سب کہ جان کا چلے جانا، ٹرین کے نیچے آکے مرجانا یہ سب جھوٹ اور بے بنیاد ہے کیونکہ وہ شخص ایس او پیز کے مطابق ایسی ویڈیوز پوسٹ کر ہی نہیں سکتا۔مداحوں کی اکثریت نے ان کے بیان کو درست قرار دیا جب کہ کچھ لوگوں نے اپنے واقعات شیئر کرتے ہوئے انہیں مضحکہ خیز ٹھہرایا۔دوسری جانب ویڈیو شیئرنگ ایپ ٹک ٹاک پر پابندی لگنے سے متعلق پوچھے جانے والے سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ میں اس کے حق میں نہیں ہوں کیونکہ بے روزگار لوگوں کا گھر اس سے چلتا ہے اور لوگ اس سے پیسے کماتے ہیں۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *