خاتون نے دھکا دینے پر ڈی ایس پی کو تھپڑ مار دیا، ویڈیو وائرل

لاہور(این این آئی)کاشانہ ویلفیئر ہوم کی سابقہ سپرنٹنڈنٹ افشاں لطیف نے آئی جی آفس کے باہر احتجاج کے دوران سکیورٹی پر تعینا ت ڈی ایس پی سکیورٹی کو تھپڑ رسید کر دیا، پولیس افسر کی جانب سے بھی خاتون کو تھپڑ مارا گیا اور ہاتھا پائی کی گئی۔تفصیلات کے مطابق کاشانہ ویلفیئر ہوم کی سابقہ سپرنٹنڈنٹ افشاں لطیف دیگر کے ہمراہ

آئی جی آفس کے باہر احتجاج کر رہی تھیں کہ اس دوران انہوں نے مقررہ حد سے آگے جانے پر روکنے سے سکیورٹی پر تعینات سپیشل پروٹیکشن یونٹ کے ڈی ایس پی کو تھپڑ رسید کر دیا۔ اس کے جواب میں پولیس افسر کی جانب سے بھی تھپڑ مارا گیا اور ہاتھا پائی کی گئی تاہم ڈیوٹی پر تعیناتی افسران اور اہلکاروں نے بیچ بچاؤ کرایا۔افشاں لطیف کے مطابق ڈی ایس پی نے پہلے مجھے دھکے دئیے، جس پر میں نے تھپڑ مارا، مجھے بھی تھپڑ مارے گئے اور میرا موبائل فون چھن لیا گیا۔مذکورہ واقعہ بدھ کے روز پیش آیا تھا۔ خاتون کو دھکا دینے پرڈی ایس پی کو تھپڑ لگنے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہے۔ دوسری جانب مسلم لیگ (ن) کی رکن پنجاب اسمبلی رابعہ فاروقی نے ایک تحریک التوائے کار پنجاب اسمبلی میں جمع کروا دی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ لاہور سمیت صوبے پنجاب کے شہری علاقوں میں جرائم کی شرح غیرمعمولی طور پر بڑھ گئی محکمہ پولیس کے اعداد وشمار کے مطابق رواں سال معمول کے مقابلے میں سنگین نوعیت کے جرائم میں 25 فیصد تک اضافہ ہوا ہے، جن میں ڈکیتی اور رہزنی کی وارداتوں کی شرح زیادہ رہی۔ پنجاب پولیس کی تیار کردہ رپورٹ میں بتایا گیا کہ رواں سال کے چھ ماہ میں سنگین نوعیت کے جرائم میں پچیس فیصد اضافہ ہوا جن میں لاک ڈاؤن کے بعد شرح زیادہ رہی۔

پولیس رپورٹ کے مطابق 2020 کے پہلے چار ماہ میں سنگین نوعیت کے6525 مقدمات درج ہوئے جبکہ رواں سال میں چارماہ کے دوران 7634 مقدمات درج کیے گئے۔اسی طرح رواں سال میں 4 ماہ کے دوران 1232 قتل، جبکہ گذشتہ سال 1214 افراد کوقتل کیا گیا۔ اس سال چھ ماہ کے دوران اندھے قتل کی 151جبکہ 2020کے اسی

دورانیے میں 136 وارداتیں ریکارڈ ہوئیں۔ڈکیتی مزاحمت پر قتل میں دیگر شہروں کی نسبت لاہور پہلے نمبر پر رہا۔ جہاں 10 شہریوں کو قتل کیا گیا۔ گذشتہ سال لاہور میں سال کے پہلے 4ماہ کے دوران چار افراد کو ڈکیتی مزاحمت پر قتل کیا گیا تھا،رواں سال ڈکیتی اور راہزنی کی6158جبکہ گذشتہ سال5120وارداتیں ریکارڈ ہوئیں۔ اسی طرح رواں سال 4 ماہ میں گینگ ریپ کے 57 واقعات جبکہ 2020میں 56 واقعات ریکارڈ ہوئے۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *