شاہد آفریدی بھی وزیراعظم عمران خان کی باتوں سے اُکتا گئے

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک /این این آئی)قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان شاہد آفریدی وزیراعظم عمران خان کی باتوں سے اکتا گئے ، تفصیلات کے مطابق شاہد خان آفریدی نے وزیراعظم عمران خان سے اپیل کی ہے کہ وہ اب کوئی نئی بات کریں کیونکہ پچھلے تین سالوں سے ایک ہی بات کو دہرایا جارہا ہے ’’نواز شریف اور آصف علی زرداری یہ کر گئے وہ کر گئے ۔ قومی ٹیم کے

سابق کپتان کا ویڈیو کلپ تیزی کیساتھ سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہا ہے کہ جس میں انہوں نے وزیراعظم عمران خان کو پیغام دیا ہے کہ اب انہیں تبدیلی کیلئے کام کرنا چاہے جس کا انہوں نے عوام سے وعدہ کیا تھا اور ان سے ووٹ لیے تھے ۔ شاہد خان آفریدی کا کہنا تھا کہ عوام وزیراعظم کی طرف دیکھ رہے کہ وہ کب قوم سے کیے گئے وعدوں کو پورا کریں گے ۔ جب تحریک انصاف شروع ہوئی تو اس وقت عمران خان کیلئے پوری قوم کھڑی ہوئی اور ان کی باتوں پر یقین کیا اب وقت آگیا ہے کہ ان سے کیے گئے وعدوں کو پورا کیا جائے۔ ان کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف پچھلے تین سالوں سے ایک بات کر رہی ہے کہ نواز شریف اور آصف زرداری نے یہ کیا اور وہ کر گئے ، اب انہیں ان باتوں کو چھوڑ کر تبدیلی کیلئے کام کرنا چاہیے ، وزیراعظم نے تبدیلی کے نام پر قوم سے ووٹ لیے ہیں ۔دوسری جانب گزشتہ دنوں قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان اور سماجی کارکن شاہد آفریدی نے کہا ہے کہ قسمت والا ہوں اللہ نے بیٹیوں سے نوازا بیٹا نہ ہونے کا کوئی دکھ نہیں۔ تفصیلات کے مطابق سابق کپتان شاہد آفریدی کو خدا تعالیٰ نے 5 بیٹیوں کی رحمتوں سے نوازا ہے، ان کی پانچوں بیٹیاں انشا، اقصیٰ، اسمارہ، اجوہ اور سب سے چھوٹی اروا آفریدی جو ابھی محض ایک یا ڈیڑھ برس کی ہے،یہ پانچوں اپنے والد کے ساتھ ساتھ پورے پاکستان کی آنکھوں کا تارہ ہیں۔ شاہد آفریدی اپنی بیٹیوں سے بے حد محبت کرتے ہیں اور اکثر اپنے بیٹیوں کے ساتھ بہترین لمحات کی ویڈیوز سوشل میڈیا پر بھی شیئر کرتے ہیں۔شاہد آفریدی نے

چند روز قبل نجی چینل کو انٹرویو دیا جس میں انہوں نے بتایا میں بہت قسمت والا ہوں کہ خدا نے مجھے بیٹیوں سے نوازا اور میں نے ہر بیٹی کے ساتھ اپنی قسمت کو بدلتے ہوئے دیکھا ہے۔ میزبان نے لالہ سے سوال کیا بدقسمتی ہمارے معاشرے میں ایسا ماحول ہے جہاں بیٹوں پر زیادہ زور دیا جاتا ہے اور جن کے یہاں اولاد نرینہ نہیں ہوتی انہیں طعنے دئیے جاتے ہیں۔شاہد آفریدی نے

میزبان کے سوال کے جواب میں کہا ہم پٹھانوں میں بھی اولاد نرینہ پر زور دیا جاتا ہے۔ یہاں تک کہ لوگ بیٹا ہونے کے لیے تعویذ وغیرہ بھی بنواتے ہیں۔ لیکن میں ان تمام چیزوں کے سخت خلاف ہوں۔ اللہ تعالیٰ قرآن میں فرماتا ہے میں جس کو اولاد دیتا ہوں اس کو کہتا ہوں اب جاؤ فکر نہ کرو کیونکہ باپ کا سہارا میں بنوں گا لہذا ان باتوں کو غلط تو نہیں کہا جاسکتا، قرآن پر ہمارا ایمان اور یقین ہے۔

لالہ نے کہا میں سمجھتا ہوں اللہ تعالی نے باپ اور بیٹی کا اور ماں اور بیٹے کا رشتہ بنایاہے۔ پہلے میری بیوی کو بھی بیٹا نہ ہونے کی کمی محسوس ہوتی تھی تاہم بعد میں اس کو اسلئےفکر نہیں ہوئی کیونکہ اس کا شوہر مطمئن ہے اور اسے کوئی مسئلہ نہیں کہ بیٹا ہے یا نہیں۔لالہ نے کہا میری بیوی کو پتہ ہے کہ میں اپنی بیٹیوں سے بے حد پیار کرتا ہوں اور میں

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *