اسپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویزالہٰی کے خلاف غیرقانونی بھرتیوں کی انکوائری بند

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )اسپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویزالہٰی کیخلاف غیرقانونی بھرتیوں کی انکوائری بند کر دی گئی ہے۔ احتساب عدالت کےایڈمن جج شیخ سجاد احمد نےنیب کی درخواست پرمحفوظ فیصلہ سنایا۔ نیب تفتیشی افسرکی جانب سےعدالت میں مکمل رپورٹ جمع کروائی گئی۔ نجی ٹی وی ہم نیوز کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ سماعت کے دوران نیب پر

اسیکیوٹر اسداللہ اعوان نے عدالت میں ریفرنس پر دلائل دیتے ہوئے عدالت کو بتایا کہ چوہدری پرویز الہٰی اوردیگر کے خلاف 79 غیر قانونی بھرتیوں کی انکوائری زیر التوا تھی۔ بقول نیب پراسیکیوٹر انکوائری میں نامزد جاوید قریشی اور مشیرعالم وفات پا چکے ہیں۔ نیب ریفرنس کے مطابق چوہدری پرویز الہٰی وزیر لوکل گورنمنٹ تھے تو متذکرہ افراد کو سولہویں اسکیل میں بھرتی کیا گیا تھا۔ شکایت گزارکے مطابق ان افراد کو قانونی تقاضے پورے کیے بغیر بھرتی کیا گیا، ان میں سے آدھے سے زیادہ افراد ریٹائر ہو چکے ہیں۔ غیر قانونی بھرتیوں کیلئےرولز میں نرمی اس وقت کے وزیر اعلیٰ پنجاب نے کی تھی، مرکزی ملزمان وفات پا چکے ہیں لہٰذا انکوائری بند کی جائے۔ عدالت نے پرویزالہٰی کےخلاف انکوائری بندکرنےکی درخواست منظور کرتے ہوئے انکوائری بند کرنے کا حکم دے دیا۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.