آئیں مل کر انتخابی نظام کی اصلاحات کریں وزیر اعظم کی ایک بار پھر اپوزیشن کوکھلے دل کیساتھ دعوت

اسلام آباد ( آن لائن)وزیر اعظم عمران خان نے اپوزیشن جماعتوں کو الیکشن اصلاحات کی دعوت دیتے ہوئے کہا ہے کہ آئیں مل بیٹھ کر مسئلے کا حل تلاش کریں،حکومت جمہوریت کے استحکام اور شفاف انتخابات کے لئے پرعزم ہے،الیکٹرانک ووٹنگ مشین اور ٹیکنالوجی استعمال ہی واحد حل ہے۔ہفتہ کے روز وزیر اعظم عمران خان نے سوشل میڈیا پرمختلف ٹوئٹس کرتے ہوئے کہا کہ این اے249 کے انتخابات میں کم ٹرن آئوٹ کے باوجود تمام جماعتیں دھاندلی کا شور مچا رہی ہیں،ڈسکہ کے ضمنی الیکشن اور سینیٹ انتخابات میں بھی ایسا ہی ہوا تھا ،1970کے انتخابات کے علاوہ پاکستان میں

سارے الیکشن دھاندلی کے دعوئوں نے شکوک و شہبات پیدا کئے ہیں ،حکومت جمہوریت کے استحکام اور شفاف انتخابات کے لئے پرعزم ہے ،شفاف انتخابات اور انتخابی ساکھ کے لئے ٹیکنالوجی کا استعمال اور اصلاحات لائیں گے ،2013 کے انتخابات میں قومی اسمبلی کے 133 کے حلقوں کے انتخابی تنازعات رجسٹرڈ ہوئے ،2013 میں صرف 4 انتخابی حلقوں کے ووٹوں کی جانچ پڑتال کا مطالبہ کیا تھا لیکن ہمیں مطالبے کو منوانے کے لئے ایک سال لگ گیا،126 دن کے دھرنے کے بعد جوڈیشل کمیشن تشکیل دیا گیا اس کمیشن نے انتخابات میں 40 حلقوں میں دھاندلی کی نشاندہی کی بد قسمتی سے انتخابات کے لئے کوئی خاطر خواہ اصلاحات نہیں کی گئیں ۔انتخابات کی ساکھ کے لئے الیکٹرانک ووٹنگمشین اور ٹیکنالوجی استعمال ہی واحد حل ہے ،اپوزیشن کو دعوت دیتا ہوں کہ شفاف انتخابات پر مشاورت کے لئے ہمارے ساتھ بیٹھیں ،آئیں مل کر فیصلہ کریں کہ الیکٹرانک ووٹنگ مشین کے دستیاب ماڈلز میں سے کسے استعمال کیا جائے ،انہوں نے کہا کہ ٹرمپ کی انتخابی ٹیم نے 2020 کے انتخابات کو متنازع بنانے کے لئے ہر کوشش کی لیکن ٹیکنالوجی کے استعمال کی وجہ سے انتخابی عمل میں ایک بھی بے قاعدگی نہ مل سکی ،ہم گزشتہ ایک سال سے اپوزیشن سے کہہ رہے ہیں کہ آئیں مل کر انتخابی نظام کی اصلاحات کریں ۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *