غریب صارفین شوگر ملزمالکان کے ہاتھوں لٹنے پر مجبور گرمیوں میں چینی کی فی کلو قیمت 125روپے ہونے کا خدشہ

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)شوگر ملز مالکان نے چینی کے ایکس ملز ریٹ 90روپے کلو سے بھی بڑھا دیئے ہیں۔روزنامہ جنگ میں حنیف خالد کی شائع خبر کے مطابق موجودہ کرشنگ سیزن میں یہ ریکارڈ ریٹ ہیں اور پاکستان شوگر

ڈیلرز ایسوسی ایشن کے ذرائع کا کہنا ہے کہ کب تک غریب صارفین لٹتے رہیں گے۔ دو تین دن میں شوگر ملز مالکان ایکس ملز ریٹ 100روپے کلو تک پہنچا سکتے ہیں اور رمضان المبارک اور اسکے بعد موسم گرما میں چینی کی فی کلو قیمت 125روپے کلو تک شوگر ملز مالکان کر دینگے۔حکمران چاہیں تو مراکش دبئی مصر مشرق بعید کے ملکوں سے چینی کم قیمتوں پر درآمد کر سکتے ہیں بشرطیکہ وہ پرائیویٹ سیکٹر کو شوگر کی درآمد ڈیوٹی فری اسی طرح کر دیں جس طرح جون 2020 میں گندم کی درآمد ہر طرح کی ڈیوٹی سے مستثنیٰ قرار دی گئی تھی۔یاد رہے کہ اس سے پہلے بھی چینی کی فی کلو قیمت ایک سو روپے سے کراس کر گئی تھی ، وزیر اعظم کی جانب سے معاملہ کا نوٹس بھی لیا گیا تھا لیکن وقتی کمی کے بعد ایک مرتبہ پھر چینی کی قیمتیں بڑھنا شروع ہو گئی ہیں ۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *