ان 2نشستوں میں ایک مجھے دی جائے مولانا فضل الرحمن( ن) لیگ اور پیپلز پارٹی سے منت سماجت کرنے لگے

لاہور(آن لائن)وزیراعظم کے معاون خصوصی شہباز گل نے کہا ہے کہ پی پی اورن نے فضل الرحمان کوموم کی گڑیابناڈالا ہے ، مولاناپی پی،ن لیگ کی منت سماجت کررہے ہیں کہ اسلام آبادکی 2 سیٹوں میں سے ایک ان کودیں۔ اتوار کے روز معاون خصوصی شہباز گل نے اپنے ٹوئٹ میں

کہاہے کہ فضل الرحمان پہلے کہتے تھے کسی صورت سینیٹ الیکشن نہیں ہونے دیں گے، سندھ اسمبلی استعفیٰ دے دے توسینیٹ الیکشن نہیں ہوسکتے،پی پی،ن لیگ سے دھوکاکھانے کے بعداب اس کے فضائل بیان کررہے۔انہوں نے کہاکہ عمران خان نے ناصرف ان سب کی کرپشن نوراکشتی کوبے نقاب کیا،سیاسی مارکیٹ میں ان کوان کی اصل قیمت” دوکے ساتھ ایک فری”پرلے آئے ،ان کاکہناتھا کہ نیااین آراوتونہیں اب خان پچھلے کاحساب بھی لے گا۔دریں اثنا میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پہلے حکومتوں میں آنے کیلئے بھاؤ تاؤ کیا جاتا تھا، وزیراعظم بھاؤ تھاؤ کے ذریعے آنے والوں کیخلاف ہیں، عمران خان وہ پہلا لیڈر ہے جو سمجھوتہ نہیں کرے گا، ہماری 60 دن کی زندگی گیدڑ کی 100 سالہ زندگی سے بہتر ہے، مریم نواز نے کہا سیف الملوک پارٹی کا اثاثہ ہیں، مریم صفدر کے والد کا سرمایہ چور، ڈاکو اور قبضہ مافیا ہی ہوسکتے ہیں۔ انہوںنے کہا کہ حکومت نے ایک ارب سے زائد کی سرکاری اراضی واگزار

کرائی، ان سرکاری اراضی پر غریبوں کے گھر بنائیں گے۔ کرپٹ، چور لندن میں دودھ کی ملائی کھا کر چھپ کے بیٹھے ہیں، تھانہ، کچہری نئی بات نہیں، مقدمات کا سامنا کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ ساہیوال کی زرخیز زمین میں کول پاور پلانٹ لگایا گیا، دنیا میں کول پاور پلانٹ ختم ہوگئے،

کوئلے سے براہ راست کہیں بھی بجلی نہیں بنائی جاتی، کوئلے سے بجلی براہ راست نہیں گیس بنا کر بجلی پیدا کی جاتی ہے، ساہیوال میں 320 میگاواٹ کا پلانٹ لگا کر براہ راست بجلی پیدا کی گئی ،ان کی قسمت اپنے لئے اچھی عوام کیلئے بری ہے کوئلہ کراچی میں اترتا ہے ساہیوال

لایا جاتا ہے ،28 جنوری کو ایئرکوالٹی انڈیکس میں ساہیوال تیسرے نمبرپر تھا،ساہیوال میں بڑی صنعتوں والے شہروں سے زیادہ آلودگی ہے،انہوں نے کہاکہ جہاں آبادی نہیں ہوتی وہاں بھی کوئلہ پاور پلانٹ لگ سکتاتھا،آباد ی میں کوئلہ پلانٹ لگا کر آلودگی پھیلائی گئی۔معاون خصوصی

نے کہاکہ عمران خان کرکٹ میں بھی غیرجانبدار امپائر لایاتھا،جو کروڑوں لگا کرسینیٹ الیکشن لڑے گا وہ عوام کی بات نہیں کرے گا،عمران خان عوام سے کئے گئے وعدے ہر صورت پورا کریں گے،انہوں نے کہاکہ یہ سارے چور سینیٹ الیکشن والی ترمیم پر ساتھ نہیں دیں گے ،امید ہے

سینیٹ انتخابات میں عدلیہ سے ریلیف ملے گا،اگرعدالت سے ریلیف نہ ملا تو ترمیم لے کر آئیں گے،34 شقوں کا این آر او منظورکرلیں پھریہ عمران خان کے پائوں دبائیں گے۔۔ایک سوال کے جواب میں انہو ں نے کہاکہ اس کمپنی کانام نہیں لیاتھا لیکن چور کی داڑھی میں تنکا،ہماراملک ہو یا کوئی اور میرصادق اورمیر جعفرہر جگہ ہوتے ہیں ،کمپنی نے آٹھ سال میں 3 اعشاریہ 80 ڈالر فی کلو میٹرکرایہ وصول کیا،وہی حالات ہیں ہم نے 1 اعشاریہ 86 ڈالر فی کلومیٹرپر بسیں چلائیں۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.