پاکستان میں سستے گھروں کی فراہمی بڑی پیشرفت سامنے آگئی

اسلام آباد، کراچی (این این آئی، آن لائن)پاکستان میں سستے گھروں کی سہولت کی فراہمی یقینی بنانے کیلئے بینک آف پنجاب اور رئیل لمیٹڈ برطانیہ نے مفاہمت کی یاداشت پر دستخط کئے ہیں۔ ایم او یو کے تحت ملک بھر میں متوسط اور کم آمدنی والے افراد کو گھروں کی تعمیر و خریداری کیلئے آسان شرائط پر قرضے فراہم کئے جائیں گے۔ ایم او یو پر پنجاب بینک گروپ کے ہیڈ آف ریٹیلز اینڈ پرائیرٹی لینڈنگ آصف ریاض جبکہ رئیل لمیٹڈ یو کے کے ڈائریکٹر آپریشنز اینڈ انویسٹمینٹ پیڑک ڈومنگوز ٹمباوا نے دستخط کئے ہیں۔یاد رہے کہ گزشتہ ماہ بھی سستے

گھروں کی ہائوسنگ سکیم کے لیے قرضے کی گارنٹی کے لیے معاہدے پر دستخط ہوئے تھے، معاہدے میں 6 بینکوں نے شرکت کی۔چھ بینکوں نے پاکستان مورگیج ری فنانس کمپنی کم آمدن والی ہاوسنگ فنانس میں رسک کو کور کرنے کے لیے مسٹر کریڈٹ گارنٹی کے معاہدے پر دستخط کئے۔ تقریب سے خطاب میں ڈپٹی گورنر سٹیٹ بینک کا کہنا تھا کہ سستے گھروں کی سکیم کے لیے وزارت خزانہ اور سٹیٹ بینک مل کر کام کر رہے ہیں۔ سٹیٹ بینک نے کم قیمت گھروں کے لیے قوانین کو نرم کیا ہے۔اس موقع پر بات کرتے ہوئے ڈپٹی گورنر سٹیٹ بینک جمیل احمد کا کہنا تھا کہ سٹیٹ بینک نے سستے گھروں کے لئے بینکوں کو قرض کی فراہمی کے اہداف دیئے ہیں، جو بینک سستے گھروں کی سکیم کے اہداف پورے نہیں کریں گے، ان کو جرمانے کا سامنا ہوگا۔پاکستان مورگیج ری فنانس کمپنی کے سی ای او مدثر حسن خان کا کہنا تھا کہ سستی ہاوسنگ سکیم کو تیزی سے آگے بڑھانا ہے۔ پاکستان میں مورگیج فنانس کا قیام دو سال پہلے عمل میں آیا تھا۔ جس کا مقصد بینکنگ سیکٹر میں طویل المدتی فنڈنگ میں رکاوٹوں کو دور کرنے اور مناسب قرض کو یقینی بنانا ہے، اس سے کم آمدنی والے طبقے کو سستی مورگیج سہولیات مل سکیں گی۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.