متعدد پرائیویٹ تعلیمی اداروں نے غیر اعلانیہ طورپر پیرسے اسکول کھول دیئے

کراچی(آن لائن)شہرقائد سمیت ملک کے بیشتر شہروں میں میں متعدد پرائیویٹ تعلیمی اداروں نے غیر اعلانیہ طورپر پیرسے اسکول کھول دیئے۔ کورونا وائرس کے پھیلاؤ کی روک تھام کیلئے دسمبر میں غیر معینہ مدت کیلئے شہر بھر کے پرائیویٹ اور سرکاری تعلیمی ادارے بند کردیئے گئے تھے سندھ حکومت نے 11 جنوری سے تعلیمی ادارے کھولنے کا اعلان کیاتھا۔ بعد ازاں وفاقی وزیر تعلیم نے

25 جنوری سے مرحلہ وار تعلیمی ادارے کھولنے کا اعلان کیا تھالیکن شہر میں پرائیویٹ تعلیمی اداروں نے پیرسے اسکول کھول دیئے ہیں۔ اسکول انتظامیہ نے والدین کو ہدایت کی ہے کہ بچوں کو بغیر یونیفارم کے اسکول بھیجیں جو اسکول کھولے گئے ہیں۔ طلباکو ہدایت دی گئی ہے کہ کورونا وائرس کے باعث ایس او پیز کا خیال رکھیں طلباایک دن کے وقفے سے اسکول آئیں گے۔ دوسری جانب آل سندھ پرائیویٹ اسکولز اینڈ کالجز ایسوسی ایشن کے چیئرمین حیدر علی، مرکزی رہنماں شہاب اقبال، محمد یونس، ڈاکٹر نجیب میمن، دوست محمد دانش، مرتضی شاہ، محمد سلیم، توصیف شاہ، محمد ساجد، اعجاز علی، مسعود شاہ، منیر عباسی، شکیل سومرو، مرزا اشفاق بیگ،امتیاز مارکھانی، ضلعی صدور اور دیگر ایگزیکٹو ممبران نے وزیر تعلیم سندھ سعید غنی سے فوری طور پر اسٹیرنگ کمیٹی کا اجلاس بلانے کا مطالبہ کیا ہے۔ان رہنماوں کا کہنا تھا کہ Covid-19 کی وجہ سے سال 21-2020 کے بیشتر تعلیمی معاملات التوا کا شکار ہیں۔ نیز سال 22-2021 کے معاملات بھی طے کرنا باقی ہیں۔جماعت اول تا ہشتم امتحانات، نویں دسویں اور گیارہویں بارہویں کے امتحانات اور ان کے نتائج، اسکولوں اور کالجوں میں نئے داخلے سال 21-2020 کی تکمیل، 22-2021 کے آغاز، گرمیوں اور سردیوں کی چھٹیاں اور دیگر معاملات کے لیے نظام الاوقات طے کرنا فوری طور پر ضروری ہے تا کہ تمام اسٹیک ہولڈرز اپنا کام بہتر اور منظم انداز میں انجام دے سکیں۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *