حکومت اپوزیشن سے فوری مذاکرات کرے اہم وفاقی وزیر نے عمران خان کو مشورہ دیدیا

اسلام آباد،لاہور(آن لائن، این این آئی ) وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوی فواد چودھری نے کہا ہے کہ لاہور جلسے کی ناکامی کے بعد اپوزیشن کا بیانیہ عملاً اپنی موت مر گیا ہے لیکن حکومت کو بہرحال اپوزیشن کو راستہ دینا چاہیے اور فوری مذاکرات کا آغاز ہونا چاہیے۔پیر کے روز اپنی ٹوئٹ میں فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ اگر مینار پاکستان گراؤنڈ میں پانی ہوتا تو محمود خان اچکزئی جیسے کئی بونوں کو چلو بھر پانی میسر ہوتا، یہ علیحدہ بات ہے کہ ڈھٹائی کی وجہ سے نہ ڈوبتے۔ کل کے جلسے کی ناکامی کے بعد اپوزیشن کا بیانیہ

عملاً اپنی موت مر گیا ہے، حکومت کو بہرحال اپوزیشن کو راستہ دینا چاہیے اور مذاکرات کا آغاز ہونا چاہیے۔دریں اثنا صوبائی وزیر کالونیز و جیل خانہ جات فیاض الحسن چوہان نے کہا ہے کہ پی ڈی ایم کے جلسے میں محمود اچکزئی کے لاہوریوں سے متعلق تضحیک آمیز بیانات انتہائی قابل مذمت ہیں، محمود اچکزئی نے ن لیگ کے پلیٹ فارم اور بیگم صفدر اعوان کی موجودگی میں لاہور کے عوام کی توہین کی۔ بیگم صفدر اعوان محمود خان اچکزئی کی جانب سے لاہوریوں سمیت پوری پاکستانی قوم سے معافی مانگیں۔صوبائی وزیر فیاض الحسن چوہان نے مینار پاکستان جلسے میں خطاب پر محمود خان اچکزئی کو خوب آڑے ہاتھوں لیاکہا کہ حقیقت یہ ہے کہ محمود خان اچکزئی، بلوچی گاندھی عبدالصمد خان اچکزئی کا بیٹا ہے اور عبدالصمد خان اچکزئی نے قائداعظم اور تحریک پاکستان کی مخالفت میں کانگریس اور ہندوں کا ساتھ دیا جبکہ محمود خان اچکزئی نے آج تک پاکستان کو دل سے تسلیم کیا نہ پاکستان زندہ باد کا نعرہ لگایا اور نہ جھنڈا لہرایا ہے۔فیاض الحسن چوہان نے کہا کہ محمود خان اچکزئی این ڈی ایس اور را کا ایجنٹ ہے اور کھلم کھلا کر پختونستان کی بات کرتا ہے۔ بیگم صفدر اعوان محمود خان اچکزئی کی جانب سے لاہوریوں سمیت پوری پاکستانی قوم سے معافی مانگیں۔وزیر جیل خانہ جات پنجاب کا کہنا تھا کہ لاہوری اسلام، جمہوریت اور انسانیت کے لیے چلنے والی ہر تحریک کا ہراول دستہ رہے ہیں۔ بیگم صفدر اعوان، محمود خان اچکزئی اور خواجہ سعد رفیق کے لیے شرم سے ڈوب مرنے کا مقام ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.