خیبر ٹیچنگ ہسپتال میں پھر آکسیجن کی فراہمی میں خرابی انتظامیہ کی دوڑیں لگ گئیں

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)خیبرٹیچنگ ہسپتال میں منگل کی شام ایک مرتبہ پھرآکسیجن کی فراہمی میں خرابی پیدا ہوگئی جس کے باعث ہنگامی طورپر حیات آباد ٹیچنگ ہسپتال سے عملے کوخرابی دور کرنے کے لئے طلب کرلیا گیا جنھوں نے رات دس بجے کے قریب گیس کا پریشر بحال کردیا

تاہم ہسپتال ذرائع کے مطابق اس دوران کوئی حادثہ رونما نہیں ہوا۔روزنامہ جنگ میں ارشد عزیز ملک کی شائع خبر کے مطابق منگل کی شام چھ بجے کے قریب ہسپتال کے پلانٹ سے اکسیجن کے پریشر میںکمی پیدا ہوگئی جس سے مریضوں کو اکسیجن کی فراہمی میں خلل پیدا ہوگیا تاہم ہسپتال انتظامیہ نے ہنگامی حالت میں حیات ٹیچنگ ہسپتال سے ٹیکنکل عملے کو طلب کرلیا جنھوں نے چار گھنٹوں بعد پریشر کوبحال کردیا ۔اس حوالے خیبرٹیچنگ ہسپتال کے بورڈ آف گورنرز کے چیئرمین ندیم خاور نے بتایا کہ ہسپتال ڈائریکٹر نے واقعے کی اطلاع دی تھی تاہم بعد میں مسلے کو حل کرلیا گیا ۔ہسپتال کے قائم مقام ڈائریکٹرپروفیسر روح المقیم نے بتایا کہ آکسیجن کا پریشر کم ہوگیا تھا تاہم ایچ ایم سی کے عملے کوہنگامی طورپر طلب کیا گیاجبکہ اپنے ہسپتال کے سٹاف کو بھی بلایا گیا ۔انھوں نے کہا کہ پلانٹ کے قریب وارڈز میں پریشر ٹھیک تھا لیکن پلانٹ سے دوروارڈز میں پریشر انتہائی کم تھا تاہم رات دس بجے کے قریب پریشر کو بحال کردیاگیا ۔انھوں نے کہا کہ اس دوران کوئی ناخوشگوار واقعہ رونما نہیںہوا۔یادرہے کہ ہفتہ اوراتوار کی درمیانی شب اکسیجن کی بندش سے ہسپتال میںسات مریض جاں بحق ہوئے تھیجبکہ ہسپتال کے ڈائریکٹر اور دیگرعملے کو معطل کردیا گیا تھا۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.