ن لیگ کے بعد پیپلز پارٹی کا بھی پہلا استعفیٰ آگیا‎‎

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک )پاکستان مسلم لیگ کے بعد پاکستان پیپلز پارٹی سے بھی استعفے آنا کا عمل شروع ، پہلے استعفے کا اعلان ۔ تفصیلات کے مطابق سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی کے بیٹے رکن پنجاب اسمبلی علی حیدر گیلانی نے اپنا استعفیٰ لکھ دیا ۔ سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر انہوں نے اپنے استعفے کی تصویر شیئر کی اور کہا کہ انہوں نے یہ استعفیٰ پاکستان میں

جمہوریت کی جد وجہد کو تیز کرنے کیلئے دیا ہے۔انہوں نے پاکستان پیپلز پارٹی کو اختیار دیا ہے کہ وہ اپنی مرضی کے مطابق میرا استعفیٰ استعمال کر سکتے ہیں ۔ دوسری جانب پاکستان ڈیمو کریٹ موومنٹ کا اجلاس ختم ہو چکا ہے ، اجلاس میںنواز شریف نے ارکان اسمبلی کا ہدایات کی تھیں کہ وہ اپنے استعفے مولانا کے پاس جمع کروا دیں ۔ تاہم اس حوالے سے نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے سینئر رہنما جاوید لطیف نے دعویٰ کیا ہے کہ ان کی اطلاعات کے مطابق ابھی تک 36ارکان اسمبلی نے اپنے استعفے پیش کر دیے ہیں ۔ ان کا کہنا تھا کہ پارٹی رہنما اپنی قیادت کیساتھ کھڑی ہے جیسے ہی حتمی فیصلہ ہو گا تما ارکان اسمبلی اپنے استعفے پارلیمنٹ میں جمع کروا دیںگے ۔قبل ازیں مسلم لیگ ( ن) کے ارکان اسمبلی نے اپنے استعفے پارٹی قیادت کو بھجوانے شروع کر دیئے ۔ پارٹی ذرائع کے مطابق پارٹی نے تا حال باضابطہ طور پر استعفے طلب نہیں کیئے تاہم پارٹی کی پالیسی کو مدنظر رکھتے ہوئے اور پارٹی سے وفاداری نبھانے والے چند اراکین اسمبلی نے اجتماعی استعفوں سے قبل ہی انفرادی طورپر اپنے استعفے پارٹی قیادت کو بھجوا نے شروع کر دیئے ہیں۔ پارٹی قیادت کو استعفے بھجوانے والوں میں لاہور سے رکن اسمبلی افضل کھوکھر ، سیف اللہ کھوکھر ،سرگودھا سے حامد حمید ،رانا منور غوث اور بصیر پور سے افتخار چھچھر نے اپنے استعفے پارٹی قیادت کو جمع کرا دیئے ہیں ۔پارٹی ترجمان عظمیٰ بخاری کا کہناہے کہ پارٹی کی جانب سے استعفے طلب نہیں کیئے گئے لیکن چند اراکین اسمبلی نے پارٹی پالیسی کو مدنظر رکھتے ہوئے استعفے جمع کرائے ہیں جن کی ہم قدر کرتے ہیں ۔‎

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.