پاکستان کے زرمبادلہ کے ذخائر میں زبردست اضافہ

اسلام آباد( آن لائن )وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ کرونا عالمی وبائی چیلنج کے باوجود زرمبادلہ کی شرح میں اضافہ، بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کا موجودہ حکومت کی معاشی پالیسیوں پر اعتماد کا اظہار ہے ، انشا للہ بہت جلد ملکی معیشت کو درپیش چیلنجز پر قابو پانے میں کامیاب ہو جائیں گے ۔جمعہ کو گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر نے اسلام آباد میں وزیر خارجہ مخدوم شاہ

محمود قریشی سے ملاقات کی جس میں ملک کی مجموعی اقتصادی صورتحال سمیت اہم امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔گورنر اسٹیٹ بینک نے اسٹیٹ بینک کی کارکردگی ، زرمبادلہ کی شرح میں اضافے اور مالیاتی اشاریوں کے حوالے سے وزیر خارجہ کو بریفنگ دی۔ شاہ محمود قریشی نے کہاکہ کرونا عالمی وبا نے پوری دنیا کی معیشت کو شدید متاثر کیا ہے ۔انہوںنے کہاکہ کرونا کے باعث پاکستان جیسے ترقی پذیر اور محدود وسائل کے حامل ممالک، معاشی طور پر شدید متاثر ہوئے ہیں ۔انہوںنے کہاکہ کرونا عالمی وبائی چیلنج کے باوجود زرمبادلہ کی شرح میں اضافہ، بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کا موجودہ حکومت کی معاشی پالیسیوں پر اعتماد کا اظہار ہے ۔ انہوں نے کہاکہ ہمارے سفرا معاشی سفارتکاری کے ذریعے، پاکستان میں سرمایہ کاری کے میسر مواقعوں اور حکومت کی کاروبار دوست پالیسیوں کو دنیا بھر میں متعارف کروا رہے ہیں ۔ انہوںنے کہاکہ یورپی یونین کی جانب سے پاکستان کیلئے جی پی ایس پلس سٹیٹس کا تسلسل، روپے کی قدر میں اضافہ اور دیگر معاشی اشاریے ہماری درست سمت کی نشاندہی کر رہے ہیں ۔ انہوںنے کہاکہ انشا للہ بہت جلد ملکی معیشت کو درپیش چیلنجز پر قابو پانے میں کامیاب ہو جائیں گے۔یاد رہے کہ اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے زرمبادلہ کے ذخائر کی ہفتہ وار رپورٹ جاری کردی جس میں بتایا گیا ہے کہ مرکزی بینک کے ذخائر اضافے کے بعد 12 ارب 18 کروڑ ڈالر زسے تجاوز کرگئے۔

اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے ترجمان کی جانب سے موصول ہونے والے اعلامیے میں بتایا گیا ہے کہ زرمبادلہ کے ذخائر کے حوالے سے جاری ہونے والی رپورٹ میں 29 اکتوبر کے اعداد و شمار شامل کیے گئے ہیں۔رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ 29 اکتوبر تک اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے ذخائر میں 6 کروڑ دس لاکھ ڈالرز کا اضافہ ہوا جس کے بعد مرکزی بینک کے مجموعی  ذخائر بڑھ

کر 12 ارب 18 کروڑ ڈالر سے تجاوز کرگئے۔اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے مطابق کمرشل بینکوں کے پاس 29 اکتوبر تک 7 ارب 17 کروڑ ڈالرز موجود تھے۔ اگر مجموعی ذخائر کی مالیت کے حوالے سے بات کی جائے تو وہ اضافے کے بعد 19 ارب 35 کروڑ ڈالرز سے تجاوز کرگئی۔واضح رہے کہ  29 اکتوبر کو اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے تصدیق کی تھی کہ زرمبادلہ کے ذخائر میں

26 کروڑ 80 لاکھ ڈالرز کا اضافہ ہوا ہے۔اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے ترجمان کی جانب سے زرمبادلہ کے ذخائر کی ہفتہ وار رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ ایک ہفتے میں مرکزی بینک کے ذخائر میں 26 کروڑ 80 لاکھ ڈالرز کا اضافہ ہوا۔اضافے کے بعد مرکزی بینک

کے ذخائر  کی مالیت بڑھ کر 12 ارب 6 کروڑ ڈالر سے تجاوز کر گئی تھی جبکہ مجموعی زرمبادلہ کے ذخائر 19 ارب 30 کروڑ ڈالرز سے زیادہ ہوگئے ہیں۔ رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ کمرشل بینک کے پاس 7 ارب 23 کروڑ 50 لاکھ ڈالرز موجود ہیں۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *