اکیلی جوان عورت ، پانچ سوٹ کیس اور ۔۔۔۔۔ لندن سے دبئی جانے کے لیے تیار ایک عورت کے سوٹ کیسوں کی تلاشی لی گئی تو کیا کچھ برآمد ہو گیا ؟ دیکھ کر ائیرپورٹ پر کھلبلی مچ گئی

برطانوی پولیس نے لندن کے ہیتھرو ایئر پورٹ سے ایک ایسی خاتون کو گرفتار کر لیا، جو نقد رقوم سے کھچا کھچ بھرے ہوئے پانچ سوٹ کیس ساتھ لے کر دبئی جا رہی تھی۔ اس عورت کے سوٹ کیسوں سے 1.9 ملین پاؤنڈ کے کرنسی نوٹ برآمد ہوئے۔

لندن سے بدھ سات اکتوبر کو ملنے والی رپورٹوں میں یو کے بارڈر فورس کا حوالہ دیتے ہوئے بتایا گیا ہے کہ اس 30 سالہ خاتون کا نام تارا ہینلن ہے، اور وہ ہیتھرو سے ایک کمرشل فلائٹ کے ذریعے متحدہ عرب امارات میں دبئی کے لیے پرواز کرنا چاہتی تھی۔اس خاتون کے پاس جو پانچ سوٹ کیس تھے، وہ برطانوی کرنسی سے کھچا کھچ بھرے ہوئے تھے۔ شمالی انگلینڈ میں لیڈز کی رہنے والی یہ خاتون گزشتہ ہفتے کے روز دبئی جانے والی تھی کہ ایئر پورٹ حکام نے اسے روک لیا۔شک پڑنے پر جب یوکے بارڈر فورس کے اہلکاورں نے اس خاتون کے سوٹ کیسوں کی تلاشی لی تو ان میں سے 1.9 ملین پاؤنڈ کے کرنسی نوٹ برآمد ہوئے۔ یہ رقم 2.44 ملین امریکی ڈالر کے برابر بنتی ہے۔حکام نے بتایا ہے کہ برطانیہ کے کسی بھی بارڈر پر بارڈر فورس کی طرف سے سال رواں کےدوران قبضے میں لی گئی یہ سب سے بڑی رقم ہے۔ اس خاتون کے خلاف منی لانڈرنگ کے الزم میں مقدمہ درج کر کے اسے گرفتار کر لیا گیا تھا۔پیر پانچ اکتوبر کو اسے ایک مقامی مجسٹریٹ کی عدالت میں پیش بھی کر دیا گیا۔ عدالت نے اسے پانچ نومبر تک پولیس کی تفتیشی تحویل میں دے دیا ہے۔برطانوی حکومت کے مطابق وہ منی لانڈرنگ اور اس سے جڑے جرائم کے خلاف سخت اقدامات کر رہی ہے، تاکہ برطانیہ سے غیر اعلانیہ یا غیر قانونی طور پر باہر لے جائی جانے والی رقوم کو منظم جرائم کے لیے استعمال نہ کیا جا سکے۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *